• To make this place safe and authentic we allow only registered members to participate Registration is easy and will take only 2 minutes of your time PROMISE

Information Textile Designer (ٹیکسٹائل ڈیزائنر)

ٹیکسٹائل ڈیزائنر
ٹیکسٹائل ڈیزائنر اون، دھاگے یا کپڑے کی مدد سے کچھ ڈیزائن تیار کرتا ہے جن سے مَردوں، عورتوں اور بچوں کے لباس یا فرنیچر کے غلاف، چادریں وغیرہ تیار کیے جاتے ہیں۔ اسے خام مال، رنگوں اور مختلف کپڑوں کی تیاری کے مراحل کا پتا ہوتا ہے۔ کپڑے سے وہ آرائشی اشیا اور لباس تیار کرتے ہیں جو دل کش، پائیدار اور آرام دہ ہوں۔ اس کام میں مختلف خاکے اور نمونے بنائے جاتے ہیں اور پھر مارکیٹنگ کے ذریعے اس کی تشہیر کی جاتی ہے تاکہ وہ گاہکوں کے علم میں آئے اور اسے فروخت کرکے نفع کمایا جاسکے۔
اس فیلڈ میں بہ طور ہیلپر، کٹر، چیکر، مشین مین داخلے اور کام کیلئے کسی باقاعدہ ڈگری کی ضرورت نہیں ہے۔ پاکستان میں ٹیکسٹائل انڈسٹری جوبن پر ہے۔ اس کے باوجود یہاں باقاعدہ ڈگری کی اتنی ضرورت نہیں، جتنا کہ تجربہ اور مہارت کی اہمیت ہے۔ پاکستان میں ٹیکسٹائل ڈیزائنر کی خاصی کھپت ہے۔
پاکستان میں اس وقت بعض جامعات نے ٹیکسٹائل اور فیشن ڈیزائن کے متعلقہ موضوعات پر گریجویشن (بی ایس) کا آغاز کیا ہے۔ اگر آپ کے پاس اس شعبے سے دلچسپی اور اہلیت ہے تو بی ایس کے بعد قومی اور بین الاقوامی سطح پر آگے بڑھنا ممکن ہوسکتا ہے۔
درکار مہارتیں
ٹیکسٹائل ڈیزائننگ کے کیریر کو اختیار کرنے کیلئے ضروری ہے کہ بولنے اور اپنی بات سمجھانے پر کمال حاصل ہو تاکہ اپنے کلائنٹ کو اپنے کام کی حدود و قیود سے آگاہ کیا جاسکے۔ نیز، ٹیکنیکل اور مارکیٹنگ اسٹاف کو اپنی ضرورت اور لوازمات سمجھائے جاسکیں۔مختلف قسم کے کپڑوں میں استعمال ہونے والے مواد کی خصوصیات جانچنے کی صلاحیت ہو۔ مختلف رنگوں، ڈیزائن، کپڑوں، مواد وغیرہ کی مدد سے تخلیقی جدت پیدا کرنے کی خوب مہارت ہو۔ کمپیوٹر چلانے کی اچھی مہارت بھی ضروری ہے۔ تجارتی او رکاروباری شعور نہایت اہم ہے، خاص کر اگر فری لانسر کی حیثیت سے کام کررہے ہیں تو اس کی اہمیت کہیں بڑھ جاتی ہے۔
اہم شاخیں
ٹیکسٹائل ڈیزائنر: اہلیت پیدا ہونے کے بعد آپ فیشن ہاؤس، آرکیٹکٹ، انٹیریر ڈیزائنر یا کپڑے کی فیکٹری میں کام کے قابل ہوسکتے ہیں۔ آپ چاہیں تو کسی ایک شعبے کے ماہر بھی بن سکتے ہیں۔ جیسے گھر کی آرائش، دفتر کی آرائش، فرنیچر، یا کسی خاص پیشے کا لباس جیسے فائر بریگیڈ، ہیلتھ ورکر وغیرہ کی ڈیزائننگ۔
وال پیپر ڈیزائنر: یہ ڈیزائنر دیواروں کی آرائش کیلئے استعمال ہونے والے وال پیپرز کے ڈیزائن تیار کرتا ہے۔ اس شعبے میں زیادہ تر خدمات فری لانس لی جاتی ہیں، البتہ وال پیپر بنانے والے بعض بڑے کارخانے چند ایک ڈیزائنر کو باقاعدہ ملازمت بھی دیتے ہیں۔
فیشن ڈیزائنر: یہ جوتے یا لباس ڈیزائن کرتا ہے۔ اس دوران وہ مقبول فیشن کا خیال رکھتا ہے کہ کیا کپڑا، رنگ اور انداز پسند کیا جارہا ہے۔ بعض اوقات وہ اپنے ڈیزائن میں جدت لاکر نیا ڈیزائن بھی اختراع کرسکتا ہے۔
انٹیریر ڈیزائنر: یہ گھروں، دفتروں کی آرائش کرتا ہے۔ مختلف رنگ، انداز، ٹیکسچر اور تیکنیکیں استعمال کرتے ہوئے کلائنٹ کی ضرورت کے مطابق متعلقہ جگہ کو پُرکشش، آرام دہ اور زیادہ قابل عمل بنانا انٹیریر ڈیزائنر کی ذمے داری ہے۔
ٹیکسٹائل کنزرویٹر: یہ پیشہ وَر عجائب گھر یا لوک ورثہ کے ساتھ کام کرتا ہے اور وہاں قدیم اور تاریخی لباسوں، دیواروں، فرشوں اور دیگر نوادرات کی حفاظت اور انھیں ان کی اصلی حالت کے قریب تر رکھنے کی کوشش کرتا ہے۔ دراصل، ان کی تاریخی اہمیت برقرار رکھنے کیلئے یہ لوازمات کیے جاتے ہیں، کیوں کہ یہ اشیا قومی اثاثہ ہوتی ہیں۔ اس کام کیلئے ڈیزائنر کو ڈیزائن کی تاریخ، ٹیکسٹائل کی نوعیت اور اس زمانے کے روایتی طریقوں کی تفصیلی معلومات اور شعور ہو۔
اہم نکات
دلچسپیاں: آرٹ، کرافٹ، فیشن، سلائی، کڑھائی، ڈیزائن ٹکنالوجی، ریاضی، کیمیا، انفرمیشن ٹکنالوجی (آئی ٹی)۔
کم از کم اہلیت: ٹیکسٹائل یا فیشن ڈیزائن میں ڈگری اس فیلڈ میں داخلے کیلئے معاون ہوگی۔ البتہ زیادہ تر کسی ماہر کے ساتھ کام کرکے تجربہ حاصل کیا جاتا ہے جو آگے بڑھنے میں مددگار ہوتا ہے۔
طرزِ کار: زیادہ تر دفتری اوقات میں کام کیا جاتا ہے۔ تاہم، بعض اوقات کسی پروجیکٹ کو تاریخ تکمیل تک مکمل کرنے کیلئے زیادہ وقت بھی دینا پڑتا ہے۔
کام کا مقام: زیادہ تر دفتر یا فیکٹری میں کام کیا جاتا ہے، تاہم کسی کلائنٹ کی ضرورت کے مطابق کلائنٹ کے دفتر یا کسی خاص مقام پر جانا بھی پڑسکتا ہے۔ تجارتی میلوں اور ٹیکسٹائل ایکسپو میں جانا نئے خیالات کا ذریعہ بنتا ہے۔
تلخیاں: بہت ہی تخلیقی کام ہے۔ زیادہ تر بڑی ٹیکسٹائل فیکٹریاں بڑے شہروں میں قائم ہوتی ہیں، لہٰذا جاب کیلئے اپنے شہر سے بڑے شہر جانا اور وہاں رہائش اختیار کرنا پڑتی ہے۔​
 
Top